سپریم کورٹ نے دوسرے قومی جوڈیشل پے کمیشن کی سفارشات منظور کی


بنچ نے کہا کہ اس بات پر زور دینے کی ضرورت ہے کہ ججوں کو ان کے دور میں اور ریٹائرمنٹ کے بعد بھی سہولیات فراہم کرنا عدلیہ کی آزادی سے منسلک ہے۔ بنچ نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سروس سے ریٹائر ہونے والے ججوں کے پنشنرز یا انتقال کر جانے والوں کے اہل خانہ بھی حل کے منتظر ہیں۔

بنچ نے کہا کہ ’’ریاست (حکومت) کی ایک مثبت ذمہ داری ہے کہ وہ عدالتی افسران کے لیے قابل احترام کام کے حالات کو یقینی بنائے۔ وہ مالی بوجھ یا اخراجات میں اضافے کا حوالہ دے کر اپنی ذمہ داری سے نہیں بچ سکتا۔‘‘

Leave A Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *