ٹرائل رَن کے دوران 2 بچیوں کو کچلتے ہوئے نکل گئی ٹرین، وزیر ریل اشونی ویشنو نے دیا جانچ کا حکم


مدھیہ پردیش کے اندور واقع ضلع لسوڑیا تھانہ علاقہ کے سیٹلائٹ جنکشن کالونی باشندہ تین بچیاں ببلی، رادھیکا اور سادھنا کوچنگ کلاس کے بعد واپس گھر لوٹ رہی تھیں جب ببلی اور رادھیکا ٹرین کی زد میں آ گئیں۔

ٹرین، علامتی تصویر آئی اے این ایس

user

مدھیہ پردیش کے اندور میں ایک دردناک حادثہ پیش آیا ہے جس میں دو بچیوں کی موت واقع ہو گئی۔ دراصل اندور ضلع کے لسوڑیا تھانہ حلقہ میں تین بچیاں کوچنگ کلاس کے بعد گھر لوٹ رہی تھیں جب ایک ٹرین کے ٹرائل رَن کے دوران دو بچیاں حادثہ کا شکار ہو گئیں۔ اس حادثہ کی خبر ملنے پر پہنچی لسوڑیا تھانہ پولیس نے بچیوں کی لاش کو قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے بھیج دیا۔

اس حادثہ کی خبر تیزی کے ساتھ علاقے میں پھیل گئی۔ خبر ملتے ہی ریاستی وزیر تلسی سلاوٹ سمیت دیگر مقامی عوامی نمائندے مردہ بچیوں کے اہل خانہ سے ملاقات کے لیے پہنچے۔ تلسی سلاوٹ نے اس دردناک حادثہ پر شدید رنج کا اظہار کیا اور بچیوں کے اہل خانہ کو ہر ممکن مدد کی یقین دہانی کرائی۔

موصولہ اطلاع کے مطابق لسوڑیا تھانہ حلقہ کے سیٹلائٹ جنکشن کالونی باشندہ تین بچیاں ببلی، رادھیکا اور سادھنا کوچنگ کلاس کے بعد واپس اپنے گھر کی طرف لوٹ رہی تھیں۔ اسی دوران جب وہ ریلوے ٹریک کے قریب تھیں تو سب سے آگے چلنے والی لڑکی سادھنا ریلوے ٹریک کراس کر گئی، لیکن پیچھے چلنے والی ببلی اور رادھیکا اچانک سے ریلوے ٹریک پر آ رہی ٹریک کی زد میں آ گئی۔ جائے حادثہ پر ہی دونوں بچیوں کی موت ہو گئی۔

بتایا جا رہا ہے کہ اس ریلوے ٹریک پر کسی طرح کی کوئی ٹرین نہیں گزرتی تھی، لیکن آج اس ٹریک پر ٹرائل رَن ہونا تھا۔ جب ٹرائل رَن ہو رہا تھا تبھی بچیوں کا وہاں سے گزرنا ہوا اور اس دوران دو بچیاں اس کی زد میں آ گئیں۔ لسوڑیا تھانہ انچارج تاریش سونی نے بتایا کہ حادثہ میں دو بچیوں کی موت ہوئی ہے۔ ٹرین حادثہ کی جانکاری جب وزیر ریل اشونی ویشنو کو ملی تو انھوں نے جانچ کا حکم صادر کر دیا۔ موقع پر موجود سادھنا نامی بچی نے بتایا کہ وہ اپنی دونوں ساتھیوں کے ساتھ گھر کی طرف جا رہی تھی جب یہ حادثہ پیش آیا۔ وہ تو ریلوے ٹریک پار کر گئی، لیکن ببلی اور رادھیکا پیچھے چل رہی تھیں اس لیے ٹریک پار نہیں کر پائیں۔ جب اس نے پیچھے مڑ کر دیکھا تو کافی تیزی سے (تقریباً 120 کلومیٹر فی گھنٹہ رفتار سے) ٹرین وہاں سے گزری اور اس دوران دونوں ساتھ چلنے والی بچیاں ٹرین کی زد میں آ گئیں۔ وہ جب تک کچھ سمجھ پاتی، اس سے پہلے ہی ٹرین ان کو کچلتے ہوئے آگے نکل گئی۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;

Leave A Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *